بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

18 شوال 1443ھ 20 مئی 2022 ء

دارالافتاء

 

محمد احمد صاحب کی تفسیر سے درس دینا


سوال

ہماری مسجد میں بعد فجر امام صاحب تفسیر  "درسِ  قرآن از الحاج مولانا محمد احمد صاحب"  سے قرآنِ  کریم کا درس دیتے ہیں،  جس پر ہمارے اَکابرین میں سے کئی ایک کی تائید بھی ہے،  جب کہ ایک مولانا صاحب کا فرمانا  ہے کہ اس تفسیر پر  "احسن الفتاوی"  میں رد کیا گیا ہے،  آپ حضرات کا اس تفسیر کے بارے میں کیا موقف ہے؟ نیز امام صاحب  کے لیے اس تفسیر سے درس دینا کیسا ہے؟

جواب

صورتِ  مسئولہ میں  امام  صاحب (عالمِ  دین) کے لیے اس  تفسیر سے درس دینا جائز ہے۔   "احسن الفتاوی"  میں جو رد کیا گیا ہے،  وہ غیر عالم کے لیے  درسِ قرآن دینے پر رد ہے۔

درج ذیل لنک پر اسی سوال سے متعلق تفصیلی فتویٰ ملاحظہ کیجیے:

تفسیر درسِ قرآن از الحاج محمد احمد صاحب

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144111201390

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں