بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

20 ربیع الاول 1443ھ 27 اکتوبر 2021 ء

دارالافتاء

 

حافظہ کی تقویت کے لیے وظیفہ


سوال

حافظہ مضبوط ہونے کا وظیفہ بتادیں؟

جواب

حافظہ کی تیزی میں زیادہ کردار اوراد و وظائف کے بجائے گناہوں سے اجتناب اور یک سوئی کا ہوتا ہے، گناہوں سے حافظہ کم زور ہوتا ہے، امام شافعی رحمہ اللہ فرماتے ہیں کہ میں نے اپنے استاذ ’’وکیع‘‘ (رحمہ اللہ) سے اپنے حافظہ کے خراب (کم زور) ہونے کی شکایت کی تو انہوں (وکیع) نے مجھے گناہوں سے بچنے کی نصیحت کی، اس سے پتا  چلتا ہے کہ گناہوں  کا ایک اثر یہ بھی ہوتا ہے کہ آدمی کی یاد داشت(حافظہ) کم زور ہوجاتا ہے،  اس لیے ہر طرح کے صغیرہ و کبیرہ گناہ سے بچنے کا اہتمام نہایت ضروری ہے۔

دوسری چیز جس کا اہتمام کرنے کی ضرورت ہے وہ یک سوئی ہے، تعلیم کے دوران ایسی کوئی بھی مشغولیت جو توجہ تقسیم یا منتشر کردے وہ حفظ کے لیے نقصان دہ ہے، خصوصاً موبائل وغیرہ کا بے جا استعمال۔ 

ہمارے اکابر سے ذہانت کی تقویت کے اسباب سے متعلق یہ بھی منقول ہے کہ نہار منہ کشمش اور بادام کااستعمال حافظہ کے لیے مفید ہے، مسواک کا پنج گانہ نماز سے پہلے وضو میں استعمال اور کثرتِ تلاوتِ قرآن مجید  و استغفار سے باطن روشن ہوتا ہے، جو قوتِ حافظہ کا باعث ہے۔ حصولِ علم میں مسلسل محنت، بلاعذر ناغہ نہ کرنا قوتِ حافظہ کے لیے اچھے اعمال ہیں۔

 حافظہ اور ذہانت پر کم نیند اور بے خوابی زہر کا اثر کرتی ہے، اس سے ذہنی الجھن پیدا ہوتی ہے، لہٰذا نیند پوری کرنے کے اہتمام کے ساتھ دوپہر کے اوقات میں قیلولہ کی عادت ڈالیں، اس سے ذہن بیدار رہنے کے ساتھ حافظہ بھی اچھا ہوتاہے۔  نیز  اگر آپ طالبِ علم ہیں تو جو چیز یاد کرنی ہو اسے مغرب کے بعد یاد کرنے کا اہتمام کریں، رات سونے سے پہلے اسے مرتبہ دہرالیں اور صبح اٹھنے کے بعد وضو ونماز سے فراغت کے بعد سب سے پہلے رات یاد کیا ہوا دُہرا لیا کریں۔

نیز ہر فرض نماز کے بعد دایاں ہاتھ پیشانی پر رکھ کر گیارہ مرتبہ "یَاقَوِيُّ" پڑھیں، نیز ہر فرض نماز کے بعد دایاں ہاتھ دل کی طرف رکھ کر سورہ طہ پارہ نمبر  16 کی آیت 25 تا 28،  (’’رَبِّ اشْرَحْ لِيْ صَدْرِيْ وَیَسِّرْ لِيْ أَمْرِيْ وَاحْلُلْ عُقْدَةً مِّنْ لِّسَانِيْ یَفْقَهُوْا قَوْلِيْ‘) سات مرتبہ پڑھ لیا کریں۔ فقط واللہ اعلم

تقویتِ حافظہ کے لیے ایک ماثور عمل اور مزید تفصیل کے لیے درج ذیل لنک ملاحظہ کیجیے:

حفظ قرآن میں آسانی کے لیے عمل اور تقویت حافظہ اور ذہانت کے اسباب

حافظہ اور ذہانت کی تیزی کے لیے وظیفہ


فتوی نمبر : 144204200424

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں