بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

1 ربیع الاول 1444ھ 28 ستمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

زمین پر قبضہ کیا لیکن اس کی قیمت ادا کرنے سے پہلے انتقال ہوگیا


سوال

اگر  زید نے کسی زمین پر قبضہ کرلیا تھا، جب کہ اس زمین کے مالک کو قیمت ادا نہیں کی تھی،  اس اثناء میں زید فوت ہو گیا تو کیا اب اس زمین میں وراثت جاری ہوگی ؟

جواب

صورتِ مسئولہ میں اگر زید نے زمین خرید کر اس کی رقم ادا نہیں کی تھی تو زید اس زمین کا مالک تھا، اس کے ذمہ جو قیمت واجب الادا تھی، میراث کی تقسیم سے پہلے اس کے ترکہ سے وہ قیمت ادا کی جائےاور یہ زمین اس کے ترکہ میں شمار ہوکر اس کے ورثاء میں شرعی حصوں کے اعتبار سے تقسیم ہوگی۔ تاہم اگر زید نے وہ زمین خریدی نہیں، بلکہ زمین غصب کرکےاس پر قبضہ کیا تھا تو یہ زمین کا قبضہ صاحبِ حق کو دینا لازم ہے، اسے میراث میں تقسیم نہیں کیا جائے گا۔

الدر المختار وحاشية ابن عابدين (رد المحتار) (6 / 760):

(ثم) تقدم (ديونه التي لها مطالب من جهة العباد)

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144206201396

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں