بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

7 ربیع الثانی 1441ھ- 05 دسمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

واہب کہتا ہے: بس رکھ لو، کیا ہبہ شمار ہوگا؟


سوال

ایک شخص نے وفات سے سات ماہ پہلے اپنی بہن کو کچھ رقم دی، اور جب بہن نے پوچھا کہ کیوں دے رہے ہو تو کہا کہ بس رکھ لو، مزید کچھ نہ کہا کہ رقم کیوں دے رہے ہیں، سوال یہ ہے کہ کیا اس رقم کا استعمال جائز ہے؟

جواب

اگر اس طرح کا کوئی قرینہ ہو کہ مرحوم نے یہ رقم بطور ملکیت کے دی ہے تو یہ رقم شرعا بہن کی ملکیت ہو گی، اور اس رقم کا استعمال درست ہوگا۔البتہ اگر مرحوم مرض الوفات میں مبتلا تھے تو پھر اس رقم کا حکم وصیت کا ہوگا اور اس پر وصیت کے احکام جاری ہوں گے۔


فتوی نمبر : 143605200023

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے