بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

5 رجب 1444ھ 28 جنوری 2023 ء

دارالافتاء

 

عمر یا محمد عمر نام رکھنا


سوال

"عمر"  یا "محمد عمر"  نام رکھنا کیسا ہے؟

جواب

’’عمر  ‘‘ جلیل القدر صحابی، خلیفہ ثانی حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالیٰ کا نام ہے، یہ نام رکھنا درست اور باعثِ برکت ہے، پھر عمومی طورپر ناموں سے پہلے برکت  سعادت کے لیے ’’محمد‘‘ لگایاجاتاہے، اس لیے علماء نے ناموں کے آداب میں سے ایک ادب یہ بھی لکھا ہے ناموں کی ابتدا  میں  ’’محمد‘‘ کاسابقہ لگانا چاہیے، لہذا ’’محمد عمر‘‘  نام رکھنا اچھا ہے، صرف ’’عمر‘‘  نام رکھنے میں بھی کوئی حرج نہیں۔  فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144211200506

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں