بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

16 ذو الحجة 1445ھ 23 جون 2024 ء

دارالافتاء

 

تبلیغ کے لیے نامحرم سے گفتگو کرنا


سوال

کیا تبلیغ کےلیے کسی نامحرم سے موبائل پر بات کی جاسکتی ہے؟

جواب

بلاتعیین وعظ وبیان کی صورت میںپردے کےشرعی احکام کے رعایت کرتےہوئےہوتوایسی دعوت پہنچانا جائزہے، تنہائی میںیافون پرگفتگوکرناجبکہ وہاں پرکوئی محرم وغیرہ موجودنہ ہوہرگزجائزنہیں ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143101200406

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں