بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

14 محرم 1444ھ 13 اگست 2022 ء

دارالافتاء

 

شوہر کے ترکہ سے بیوی کو حصہ ملے گا


سوال

میرے شوہر کا انتقال میرے سسر صاحب کے فوت ہونے کے 4 سال بعد ہوا لیکن میری ساس صاحبہ ابھی زندہ ہیں، پوچھنا یہ تھا کہ کیا ترکہ میں میرا کوئی حصہ بنتا ہے یا نہیں؟

جواب

صورتِ مسئولہ میں سائلہ کے شوہر کا انتقال چونکہ اپنے والد (سائلہ کے سسر) کے بعد ہوا لہذا سائلہ کے شوہر بھی اپنے والد کے ترکہ میں شرعی حصہ دار تھے اور شوہر کے انتقال کے بعد شوہر کے واسطے سے سائلہ بھی اپنے سسر کے ترکہ میں حصہ دار ہے، باقی مرحوم سسر اور مرحوم شوہر کے ترکہ کی حتمی تقسیم ان کے ورثاء کی تفصیل بتا کر پوچھی جاسکتی ہے۔

فقط واللہ اعلم 


فتوی نمبر : 144308101969

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں