بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

29 صفر 1444ھ 26 ستمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

روزہ کی حالت میں نسوار رکھنے کا حکم


سوال

 کیا نسوار سے روزہ ٹوٹتا ہے  ؟جب کہ نسوار کا ذائقہ نہیں آتا، اور نسوار کھائی نہیں جاتی، بلکہ نسوار رکھی جاتی ہے ۔

جواب

صورتِ مسئولہ میں نسوار منہ میں رکھنے سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے، اس لیے کہ جب نسوار کو منہ میں  رکھا جاتا ہے تو لازمی طور پر اس کا اثر  دماغ تک اور اس کے ذرات حلق تک پہنچ جاتے ہیں،اور  کسی چیز کے ذرات حلق تک پہنچ جائے تو اس سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے۔

فتاوی شامی میں ہے:

"وبه علم حكم شرب الدخان، ونظمه الشرنبلالي في شرحه على الوهبانية بقوله: ويمنع من بيع الدخان وشربه ... وشاربه في الصوم لا شك يفطر، ويلزمه التكفير لو ظن نافعاً ... كذا دافعاً شهوات بطن فقرروا".

(كتاب الصوم، باب ما يفسد الصوم، ص:395، ج:2، ط: سعيد)

وفیہ ایضا:

"(إلا إذا مضغ بحيث تلاشت في فمه) إلا أن يجد الطعم في حلقه، كما مر واستحسنه الكمال قائلاً: وهو الأصل في كل قليل مضغه".

(كتاب الصوم، باب مايفسد الصوم، ص:415 ج:2، ط: سعيد)

فقط والله أعلم


فتوی نمبر : 144309100025

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں