بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

18 ذو القعدة 1445ھ 27 مئی 2024 ء

دارالافتاء

 

روزے کی حالت میں خون دینے کا شرعی حکم


سوال

 روزے کی حالت میں خون دینے کا کیا حکم ہے؟

جواب

روزہ کے دوران اگر کسی مریض کو خون دینے کی ضرورت ہو تو خون دینا جائز ہے ، اس سے روزہ فاسد نہیں ہوتا، البتہ اتنا خون دینا مکروہ ہے جس سے روزے دار کو کم زوری  لاحق ہو جائے،  تاہم اس سے روزے پر کوئی اثر نہیں پڑتا۔

فتاوی عالمگیری میں ہے:

"ولا بأس بالحجامة إن أمن على نفسه الضعف، أما إذا خاف فإنه يكره وينبغي له أن يؤخر إلى وقت الغروب".  

(كتاب الصوم، الباب الثالث فيما يكره للصائم وما لا يكره."1/199-200، ط: رشيدية) 

فقط واللہ أعلم


فتوی نمبر : 144409101442

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں