بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

11 صفر 1443ھ 19 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

رائج مہندی سے وضو کا حکم


سوال

اس وقت جو مہندی رائج ہے، اس میں کھال تک پانی کے پہنچنے میں شبہ ہے؛ اس لیے اس کو لگانے کے بعد وضو ہو جاتا ہے یا نہیں؟

جواب

مہندی لگانے کے بعد وہ تر یا خشک حالت میں تہہ کی صورت میں جسم پر موجود ہو، تو  ایسی حالت میں وضو  صحیح ہونے کے لیے پانی جسم تک پہنچانا ضروری ہوگا، اگر پانی جسم تک پہنچ جائے تو وضو ہوگا، ورنہ نہیں۔

تاہم مہندی لگاکر ہاتھ وغیرہ دھونے کے بعد  مہندی کا جو رنگ آتاہے وہ عموماً پانی جسم تک پہنچنے سے مانع نہیں ہوتا، لہٰذا موجودہ دور کی مہندی کا رنگ لگا ہونے کی حالت میں بھی وضو ہوجائے گا، اگرچہ رنگ اترتے وقت جھلی کی صورت میں اترے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144210200133

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں