بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

17 شعبان 1445ھ 28 فروری 2024 ء

دارالافتاء

 

پاک فوج کومرتدقراردینے والے کاحکم


سوال

السلام علیکم و رحمۃ اللہ و برکاتہ۔معلوم یہ کرنا ہے کہ پاک فوج کے بارے میں کیا حکم ہے؟ زید انہیں مرتد کہتا ہے۔ کیا سب فوجی مرتد ہیں؟ ان سے لین دین کا کیا حکم ہے؟اور اگر بعض مرتد ہیں تو ان کی پہچان کیا ہے؟اور اگر فوج مرتد نہیں تو جو انہیں مرتد کہتا ہے اس کا کیا حکم ہے؟ کیا وہ خود کافر ہو جائے گا یا گناہ گار ہوگا؟براہ کرم ان سوالات کے بارے میں قرآن و حدیث کی روشنی میں جواب تحریر فرما کر عند اللہ ماجور ہوں۔

جواب

زید سے پوچھاجائے کہ وہ کس بنیاد پر پاک فوج کو مرتد کہتاہے ، بلابنیاد کسی مسلمان کو مرتدیاکافرقراردینابجائے خودکفرہے ۔واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143409200014

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں