بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

17 ذو القعدة 1445ھ 26 مئی 2024 ء

دارالافتاء

 

نماز فجرکی ادائیگی میں کوتاہی کیسے دور ہوگی؟


سوال

نماز فجرکی ادائیگی میں کوتاہی کیسے دور ہوگی ؟

جواب

رات کو  جلدی سونے کی کوشش  کریں ، سونے سے پہلےاپنے عزم اور ارادے کو مضبوط  بنائیں، نماز فجر کی اہمیت اور وعیدات  کو یاد  کریں، عشاء کے بعد دو رکعت نفل صلاۃ الحاجت پڑھ کر دعا کریں کہ فجر کی نماز کے لیے بروقت آنکھ کھل جائے اور اللہ تعالیٰ نمازِ فجر باجماعت ادائیگی کی توفیق عطا فرمائیں،    سوتے  وقت با وضو  سوئیں،  سورہ  کہف  کی آخری  چار آیات  پڑھ  کر     اللہ  تعالی  سے  فجر  باجماعت  پڑھنے  کی  دعا  کریں، اوربیدار  ہونے کے لیے مختلف  ظاہری اسباب مثلًا:   الارم  لگانا ،اور  گھر والوں کو جگانے کا کہنا وغیرہ کا اہتمام کریں  ۔اور استغفار کی کثرت کریں ۔

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144404100119

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں