بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 صفر 1443ھ 18 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

بچھڑا ذبح کرنے کی نیت کرنے سے کیا ذبح کرنا لازم ہوگیا؟


سوال

گھر میں ایک بچھڑا پالا تھا اس نیت سے کہ سالے کی شادی میں ذبح کروں گا،  اب سالہ  چوں کہ غریب  ہے تو کیا میں اس بچھڑے کو فروخت کرکے اس کی قیمت سالے کو شادی کی اخراجات کے  لیے دے سکتا ہوں؟

جواب

صورتِ  مسئولہ میں بچھڑا پال کر  سالے کی شادی میں ذبح کرنے کی صرف نیت کی تھی ، باقاعدہ منت نہیں مانی تھی تو اسے ذبح کرنا لازم نہیں،  اسے فروخت کرکے اس کی قیمت سالے کو دے سکتے ہیں۔  فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109201846

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں