بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

29 صفر 1444ھ 26 ستمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

نسیبہ اور نصیبہ میں سے کون سا درست ہے؟


سوال

نسیبہ اور نصیبہ میں سے کون سا درست ہے؟ اور اس نام کا مطلب کیا ہے؟

جواب

 صورت مسئولہ میں دونوں نام(نصیبہ اور نسیبہ) درست ہیں،  کیوں کہ نصیبہ کا معنی: حصہ، قسمت، طالع، اور تقدیر ہے، اور نسیبہ کا معنی: مناسب، رشتہ دار اور حسب ونسب میں مشہور شریف آدمی ہے۔ (القاموس الوحید:ص:1639۔1654، فیروز اللغات:ص:1429)

لیکن  (نُسَیبہ) 'ن' کے ضمہ اور'س' کے فتحہ کے ساتھ  نام رکھنا بہتر ہے، اس لیے کہ نُسیبہ ایک  صحابیہ کا نام ہے، جو  'ام عمارہ' کے نام سے مشہور ہیں۔

"الطبقات الكبرى لابن سعد"  میں ہے:

"أُمُّ عُمَارَةَ: وهي ‌نُسَيبة بنت كعب بْن عَمْرو بْنِ عَوْفِ بْنِ مَبْذُولِ بْنِ عَمْرِو بْنِ غنم من بني مازن بن النجار... وهي أخت عبد الله بن كعب شهد بدرًا."

[ ج:8، ص:303، ط:دار الكتب العلمية]

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144312100209

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں