بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

15 محرم 1446ھ 22 جولائی 2024 ء

دارالافتاء

 

نامحرم سے ہنسی مذاق پر وعید سے متعلق ایک روایت کی تحقیق


سوال

مندرجہ ذیل حدیث کی تحقیق مطلوب ہے ، اور حوالہ میں جو کتابیں دی گئی ہیں،  ان کے متعلق بھی وضاحت کردیجیے۔

حدیث مبارک میں ہے:’’جو شخص کسی غیر محرم سے ہنسی مذاق کرتاہے،  خدا ہر لفظ کے بدلے اسے ہزار سال دوزخ میں رکھے گا۔ اسی طرح جو عورت نا محرم سے مذاق کرے گی‘‘۔

جواب

حدیث کی کتابوں میں تلاش کے باوجود ہمیں اس طرح کی کوئی روایت نہیں ملی، لہذا جب تک کسی معتبر سند سے اس کا حدیث ہونا معلوم نہ ہوجائے اسے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف منسوب کرکے بیان کرنے سے احتراز کیا جائے۔

باقی آپ نے  حدیث کے حوالہ جات کے متعلق سوال میں ذکر تو کیا ہے، مگر سوال میں کوئی حوالہ مذکورنہیں ہے۔

فقط والله أعلم


فتوی نمبر : 144111200546

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں