بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 صفر 1443ھ 18 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

نماز میں قرأت کی غلطی کی وجہ سے زبان سے پشتو کا لفظ ’’نا‘‘ یا اردو کا لفظ ’’نہیں‘‘ نکلنے کا حکم


سوال

اگر کوئی امام تراویح میں غلط پڑھنے کی صورت میں بلا اختیار زبان سے پشتو میں"نا"یا اردو میں "نہیں " کہے تو نماز فاسد ہو جائے گی یا نہیں؟

جواب

اگر نماز میں قرأت کی غلطی کی وجہ سے زبان سے پشتو کا لفظ ’’نا‘‘ یا اردو کا لفظ ’’نہیں‘‘ نکل جائے تو اس سے نماز فاسد ہوجائے گی، اور امام کی نماز فاسد ہونے کی صورت میں تمام مقتدیوں کی نماز بھی باطل ہوجائے گی۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109201273

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں