بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

8 شوال 1441ھ- 31 مئی 2020 ء

دارالافتاء

 

نفس / شرم گاہ کو ہاتھ لگانے سے وضو نہیں ٹوٹتا


سوال

کیا نفس کو ہاتھ لگانے سے وضو ٹوٹ جا تا ہے؟

جواب

صورتِ  مسئولہ میں وضو نہیں ٹوٹتا۔ البتہ ہاتھ لگانے کی وجہ سے شرم گاہ سے کچھ خارج ہوجائے تو وضو ٹوٹے گا۔

"وکذلك إن مسّ ذکره بعد الوضوء فلاوضوء علیه، وهذا عندنا، وکذلك إذا نظر إلی فرج امرأة" ۔ (المبسوط للسرخسي، کتاب الصلاة، باب الوضوء والغسل، 1/183- ط: رشیدیه) فقط و الله أعلم


فتوی نمبر : 144109200959

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے