بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

29 صفر 1444ھ 26 ستمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

نبیہہ فجر نام رکھنا


سوال

نبیہہ فجر نام کیسا ہے؟

جواب

نبیہہ(نَبِيْهَة) کا معنی شریف، سمجھ دار، عقل مند، مشہور اور قابلِ احترام کے ہیں،اور" فَجْر"(راء کے سکون کے ساتھ) اس کا معنی ہے: صبح کا اُجالا۔   معنی کے اعتبار سے لڑکی کا یہ نام رکھنا درست ہے،البتہ بچی کا نام صحابیات رضی اللہ عنہن میں سے کسی کے نام پر رکھنازیادہ بہتر ہوگا۔

(القاموس الوحید، المادّہ: فجر، ص:1206، ط:ادارۃ الاسلامیات)  

   لسان العرب میں ہے:

"وشيء نبه ونبه أي مشهور. ورجل نبيه: شريف. ونبه الرجل، بالضم: شرف واشتهر نباهة فهو نبيه ونابه، وهو خلاف الخامل. ونبهته أنا: رفعته من الخمول. يقال: أشيعوا بالكنى فإنها منبهة. وفي الحديث: فإنه منبهة للكريم أي مشرفة ومعلاة من النباهة. يقال: نبه ينبه إذا صار نبيها شريفا. والنباهة: ضد الخمول، وهو نبه. وقوم نبه كالواحد؛ عن ابن الأعرابي، كأنه اسم للجمع. ورجل نبه ونبيه إذا كان معروفا شريفا."

(فصل النون ، جلد 13 ، ص:547، ط:دار صادر بیروت)

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144312100480

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں