بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

15 ربیع الثانی 1442ھ- 01 دسمبر 2020 ء

دارالافتاء

 

نابالغ بچے سے قرآن مجید گرجائے تو کیا کفارہ ہے؟


سوال

اگر کسی چھوٹے نابالغ بچے سے قرآن عظیم الشان،  ہاتھوں سے گرجائے تو اس صورت میں شریعت کیا حکم دیتی ہے؟

جواب

والدین کو  چاہیے کہ وہ قرآنِ مجید ایسی جگہ رکھیں جہاں چھوٹے اور ناسمجھ  بچوں کے ہاتھ نہ پہنچ سکیں، اور  جو بچے سمجھ  دار ہونے لگیں، انہیں ابتدا  ہی سے قرآن کا ادب واحترام سکھائیں،  اور ان کے دل میں قرآن کی عظمت اجاگر کریں، لیکن اگر کبھی بچے سے قرآن مجید گر جائے تو اس پر کوئی مؤاخذہ نہیں ہے، البتہ والدین تربیتی پہلو سے اس کے گرنے پر بچوں کو  کچھ رقم دے کر صدقہ کروادیں تو  یہ بہتر ہوگا۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109203344

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں