بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

11 صفر 1443ھ 19 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

منہ بھر کر قئے کرنے سے روزہ کا حکم


سوال

اگر طبیعت کی ناسازی کی بنا پر اذان فجر کے کچھ منٹ کے بعد منہ بھر کے یا اس سے زیادہ قے آئے تو روزہ باقی رہتا ہے یا نہیں ؟

جواب

اگر روزے کے دوران خود بخود قے ہوگئی تو روزہ فاسد  نہیں ہوگا خواہ قے  کم ہو یا منہ بھر کر ہو،  اور اگر اپنے اختیار سے جان بوجھ  کر قے کی  تو اگر منہ بھر کے قے ہو تو روزہ فاسد ہوجائے گا اور اگر منہ بھر کر نہ ہو تو روزہ فاسد نہیں ہوگا۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144209202193

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں