بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 ذو القعدة 1441ھ- 02 جولائی 2020 ء

دارالافتاء

 

میاں بیوی کے حقوق


سوال

اگر ایک مرد بیوی کی حد سےزیادہ بدزبانی، گستاخی،نافرمانی اوراولاد کو باپ اورباپ کے تمام خاندان سے متنفرکردینے کی وجہ سے بیوی کو طلاق دینے کا مصمم ارادہ رکھتا ہواوراسی وجہ سے اس نے سال بھر سے حق زوجیت ادا کرنا بند کردیا ہولیکن بچوں کے امتحانات اورخاندان میں کسی کی شادی کی وجہ سے طلاق دینے کو موخر کرتا ہوتو کیا ایسی تاخیر کے زمانے میں اس بیوی کے ہاتھ کا کھانا اورکپڑوں کی دھلائی، استری وغیرہ کا استعمال مرد کے لیے شرعاً اوراخلاقاً جائز ہے ؟

جواب

بیوی کے ہاتھ کاکھانا ،کپڑوں کی دھلائی ،استری وغیر ہ کا استعمال سائل کے لیے شرعاً واخلاقاً جائز ہے لیکن اپنے مطلب کے لیے اس کے حقوق ضائع کرنا شرعاًاخلاقاً ناجائز ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143101200203

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں