بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

18 شوال 1443ھ 20 مئی 2022 ء

دارالافتاء

 

بیوی سے فون پر جنسی بات کرنے سے انزال ہوجانا


سوال

جب کبھی  گھر فون پراپنی بیوی سے بات کرتا ہوں تو کبھی کبھی بیوی سے جنسی بات چیت  بھی ہوجاتی ہے،   جس کی وجہ سےمیرا انزال ہوجاتا ہے تو کیا اس انزال کی وجہ سے کوئی گناہ ہوگا ؟ کیا اس کی وجہ سے میں گناہ گار ہوں گا؟

جواب

بصورتِ  مسئولہ اگر فون پر بیوی کےساتھ جنسی باتیں کرتیں ہوئےخود بخود انزال ہوجائے یامذی نکلےتو اس میں کوئی گناہ نہیں ہوگا، البتہ  انزال کی صورت میں غسل کرنا لازم ہوگا۔

نیز واضح رہے کہ  میاں بیوی کا فون پر جنسی باتوں   میں اگر تصاویر کا تبادلہ ہو یا ویڈیو کال کے ذریعے بات چیت ہو  تو چوں کہ یہ جان دار کی تصاویر پر مشتمل ہے، اس لیے یہ جائز نہیں ہے۔

اور اگر یہ عمل  اس حد تک ہو کہ دونوں میسج یا آڈیو پیغام کے ذریعے آپس کی باتیں کرتے ہوں تو  تنہائی میں (جب قریب کوئی شخص موجود نہ ہو) ایسی باتیں کرنے کی گنجائش تو ہے، لیکن  میاں بیوی کو فون پر جنسی تعلق کی باتیں فون کال پر کرنے سے بھی حتی الامکان اجتناب  کرنا چاہیے، اس لیے کہ  ٹیکنالوجی کے اس دور میں نجی کالز اور ذاتی میسجز  بھی ریکارڈ ہوتے ہیں، اور کمپنیوں کے کال سینٹرز  اور آئی ٹی ڈیپارٹمنٹ میں بعض اوقات اخلاقی لحاظ سے کم زور انسان تعینات ہوتے ہیں، اس لیے پیش بندی کے طور پر  فون پر  جنسی باتیں کرنے سے اجتناب کرنا چاہیے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144201200166

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں