بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

6 جُمادى الأولى 1444ھ 01 دسمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

مغرب کی اذان اورنمازکے دوران وقفہ کرنا اوراس دوران دیگر کام کرنا


سوال

میں سعودیہ میں مقیم ہوں اوریہاں مغرب کی اذان کے بعد اقامت کے لیےدس سے پندرہ منٹ کا وقفہ دیا جاتاہے۔1۔ اس وقفہ میں نوافل کی ادائیگی صحیح ہےیانہیں؟2۔ اس وقفہ میں مغرب کی نماز کی قضاء عمری ادا کی جاسکتی ہے یانہیں ؟3۔ اس وقفہ میں قرآن کی تلاوت کی جاسکتی ہے؟

جواب

1۔2۔3 جائز ہے، البتہ علماء احناف کے نزدیک مغرب کی نماز میں اتنی زیادہ تاخیرکرنا مکروہ ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143101200090

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں