بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

13 ذو الحجة 1445ھ 20 جون 2024 ء

دارالافتاء

 

لڑکی کا ہالف (آدھی) آستین والے کپڑے پہن کر غیر محارم کے سامنے آنے کا حکم


سوال

بالغ لڑکی ہالف آستین کا کپڑا پہن کر نامحرم کے سامنے آسکتی ہے، جیسے خالہ زاد یا ماموں  زاد بھائی وغیرہ کے سامنے آنا؟

جواب

بالغ لڑکی کے لیے ہالف (آدھی) آستین والے کپڑوں میں غیر محارم مردوں کے سامنے آنا جائز نہیں ہے،  چاہے وہ غیر محرم رشتہ دار (مثلاً خالہ زاد یا ماموں زاد وغیرہ) ہوں یا اجنبی ہوں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144108201697

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں