بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

3 ربیع الاول 1442ھ- 21 اکتوبر 2020 ء

دارالافتاء

 

وتر سے قبل کیا تراویح کی فوت شدہ رکعات مکمل کرنا ضروری ہیں؟


سوال

اگر عشاء کی نماز میں جماعت قضا ہو جائے اور مسجد جا کر معلوم ہو کہ باقی جماعت تراویح پڑھ رہی ہے۔ ایسی صورت میں کیا فرض نماز اکیلے ادا کرکے اور جماعت کے ساتھ  باقی تراویح پڑھنے پر وتر کون سی ترتیب میں پڑھنا زیادہ بہتر ہے؟ آیا تراویح کی تعداد پوری کر کے وتر اکیلے پڑھی جائے یا وتر باجماعت ادائیگی کے بعد باقی تراویح پڑھ لی جائے؟

جواب

صورتِ مسئولہ میں وتر باجماعت ادا کرکے بقیہ تراویح مکمل کرلی جائے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109202151

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں