بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

1 ربیع الاول 1444ھ 28 ستمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

امام رکوع میں کمر سیدھی نہ رکھے اور نماز میں آنکھیں بند رکھے تو اس کا حکم


سوال

اگر کوئی مسجد کا امام رکوع میں اپنی پیٹھ سیدھی نہ رکھے اور قیام میں اپنے چہرے کو ایک دو بار آسمان کی طرف اُٹھائے یا نماز میں آنکھ بند رکھے یہ ان میں سے کوئی عادت ہو تو اُس امام کے پیچھے نماز پڑھنا جائز ہے؟

جواب

ایسے امام کے پیچھے نماز پڑھنا جائز ہے البتہ ان کا یہ طریقہ قابلِ اصلاح ہے۔

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144311101074

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں