بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

19 صفر 1443ھ 27 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

احرام کی حالت میں ہڈی فریکچر ہونے کی وجہ سے پلاستر باندھنا


سوال

ایک شخص کی حالتِ  احرام میں ہڈی میں فریکچر آگیا ہے  جس کی وجہ سے پاؤں میں پلاستر باندھنا پڑا، کیا اس کی وجہ سے کوئی دم یا صدقہ لازم ہوگا؟

جواب

صورتِ  مسئولہ میں احرام کی حالت میں ہڈی فریکچر ہونے کی وجہ سے ضرورت کی وجہ  پلاستر باندھنا جائز ہے، اس  سے دم یا صدقہ لازم نہیں آئے گا۔

الدر المختار وحاشية ابن عابدين (رد المحتار) (2/ 488):

(والرأس) بخلاف الميت وبقية البدن.

(قوله: وبقية البدن) بالجر عطفا على الميت: أي وبخلاف ستر بقية البدن سوى الرأس والوجه فإنه لا شيء عليه لو عصبه و يكره إن كان بغير عذر، لباب، وفي شرحه: و ينبغي استثناء الكفين لمنعه من لبس القفازين. اهـ. قلت: وكذا القدمين مما فوق معقد الشراك لمنعه من لبس الجوربين كما يأتي إلا أن يكون مراده بالستر التغطية بما لايكون لبسا فستر اليدين والرجلين بالقفازين أو الجوربين لبس فتأمل."

الفتاوي التاتارخانیة (3/578) :

"ولا بأس بأن یعصب جسده بعلة، ویکره إن فعل ذلك في غیرعلة ولا شيء علیه". (التاتارخانیة ۳؍۵۷۸) 

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144108200340

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں