بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

15 ذو القعدة 1445ھ 24 مئی 2024 ء

دارالافتاء

 

گھر میں بے برکتی کی شکایت کرنے والے صحابی کو گھر کے دروازے پر کپڑا لٹکانے کی ترغیب کیا رسول اللہ ﷺ سے ثابت ہے؟


سوال

ایک صحابی،  حضور نبی کریم صلی اللّٰہ علیہ وسلم کے پاس آئے اور فرمایا کہ میرے گھر میں برکت نہیں ہوتی تو حضور صلی اللّٰہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ تم اپنے گھر کے دروازے پر کپڑا لٹکا دو ، کچھ دنوں بعد وہ پھر حضور صلی اللّٰہ علیہ وسلم کے پاس تشریف لائے اور فرمایا اب میرے گھر میں برکت ہو رہی ہے تو حضور صلی اللّٰہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ تمہارے گھر کے سامنے سے ایک بے نمازی گزرتا تھا اس کی نظر تمہارے گھر میں پڑتی تھی اس لئے برکت نہیں ہوتی تھی ۔

کیا یہ حدیث درست ہے ؟ 

جواب

 تلاش بسیار کے باوجود ہمیں کوئی ایسی حدیث نہیں مل سکی کہ  جس میں اس طرح كےکسی واقعہ کا ذکر ہو ،  لہذا  جب تک کسی معتبر ذریعے سے ثبوت نہ جائے، اسے بیان کرنے سے گریز کیا جائے۔فقط واللہ اعلم 


فتوی نمبر : 144408101552

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں