بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

5 شوال 1441ھ- 28 مئی 2020 ء

دارالافتاء

 

حاجی پر عید کی قربانی واجب ہونے کی تفصیل


سوال

حاجی 10 ذالحجہ کو سعودیہ میں قربانی کرتے ہیں جو دمِ شکر ہوتا ہے، بہت سارے لوگ کہتے ہیں کہ قربانی مقام پر یعنی پاکستان میں بھی کرنا لازمی ہے؟

جواب

قربانی واجب ہونے کی شرائط میں سے ایک شرط مقیم ہونا بھی ہے لہذا جو حاجی مکہ مکرمہ میں مقیم بن جائے یعنی ایام حج ۸ ذالحجہ سے پہلے ۱۵ یوم مکہ مکرمہ میں قیام کی نیت ہو تا اس حاجی پر دمِ شکر کےعلاوہ عید کی قربانی بھی واجب ھے خواہ وہیں کرے یا اپنے ملک میں کسی کو وکیل بنا کر قربانی کروائے اور اگر حاجی مذکورہ تفصیل کے مطابق مقیم نہ بنتا ہو تو اس کے ذمّہ عید کی قربانی واجب نہیں، کرلے تو ثواب اور نہ کرے تو مواخذہ نہیں۔ واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143412200003

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے