بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

14 ربیع الثانی 1441ھ- 12 دسمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

گناہ سے بچنے میں کسی کی دل شکنی ہو تو کیا حکم ہے؟


سوال

ایک انسان نے پیار کیا ایک عورت کے ساتھ جب اس کو پتہ کہ یہ گناہ ہے ،اب اگر اس پیار کو چھوڑ دے تو دوسرے انسان کو تکلیف ہوتی ہے، تو کیا یہ جائز ہے؟

جواب

اگر نہ چھوڑیں گے تو اللہ تعالی اور اس کے حبیب کو تکلیف ہوگی۔ لہذا اللہ پاک کی رضا کو مقدم رکھتے ہوئے اس ناجائز تعلق کو بالکلیہ ترک کرکے گذشتہ پر ندامت اور آئندہ نہ کرنے کے پختہ عزم کے ساتھ سچـے دل سے توبہ کریں۔ واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143505200018

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے