بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

14 ذو الحجة 1445ھ 21 جون 2024 ء

دارالافتاء

 

ساڑھے ساتھ تولہ سونے کی زکات کا حساب کیسے کریں؟


سوال

ساڑے سات تولے سونے پر کتنے زکوٰۃ بنتی ہے، کیسے حساب لگایا جائے؟

جواب

صورتِ  مسئولہ میں جس دن زکات کا حساب لگایا جا رہا ہو، اس دن سونے کی موجودہ قیمت معلوم کرکے ساڑھے سات  تولہ کی جو قیمت بنتی ہو اس کو 40 سے تقسیم کر دیا جائے، حاصل جواب یعنی کل مالیت کا چالیسواں حصہ بطور زکات ادا کر دیا جائے۔

بدائع الصنائع في ترتيب الشرائع  میں ہے:

"وإنما له ولاية النقل إلى القيمة يوم الأداء فيعتبر قيمتها يوم الأداء، والصحيح أن هذا مذهب جميع أصحابنا" ( ٢ / ٢٢)

فقط واللہ  اعلم


فتوی نمبر : 144209200309

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں