بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

28 رمضان 1442ھ 11 مئی 2021 ء

دارالافتاء

 

غیر حافظہ عورت تراویح کس طرح پڑھے؟


سوال

عورت  حافظہ نہیں ہے ،اس کو  چند سورتیں یاد ہیں، وہ تراویح کس ترتیب سے  پڑھے؟

جواب

صورتِ  مسئولہ  میں  مذکورہ  عورت   کو جوسورتیں یاد  ہیں ،انہیں کو ترتیب وار بیس رکعات میں پڑھ  لے ، آسانی کے لیے  سورہ فیل سے لے کر سورہ الناس تک دس سورتیں یاد کرلی جائیں، اور ترتیب وار انہیں تراویح کی پہلی دس رکعات میں پڑھیں، پھر دوسری دس رکعات میں یہی دس سورتیں ترتیب  وار  پڑھ لیں۔ اگر دس سے کم سورتیں یاد ہیں تو انہی کو ترتیب وار پڑھیں، پھر اگلی رکعات میں دوبارہ انہی کو ترتیب وار پڑھ لیں۔

وفي البحر الرائق شرح كنز الدقائق :

"وفي التجنيس: ثم بعضهم اعتادوا قراءة {قل هو الله أحد} [الإخلاص: 1] في كل ركعة وبعضهم اختاروا قراءة سورة الفيل إلى آخر القرآن وهذا حسن لأنه لا يشتبه عليه عدد الركعات ولا يشتغل قلبه بحفظها فيتفرغ للتدبر والتفكر اهـ."

 (2/ 74الناشر: دار الكتاب الإسلامي)

وفي الدر المختار وحاشية ابن عابدين :

"وفي التجنيس: واختار بعضهم سورة الإخلاص في كل ركعة، وبعضهم سورة الفيل: أي البداءة منها ثم يعيدها، وهذا أحسن لئلا يشتغل قلبه بعدد الركعات. قال في الحلية: وعلى هذا استقر عمل أئمة أكثر المساجد في ديارنا إلا أنهم يبدءون بقراءة سورة التكاثر في الأولى والإخلاص في الثانية، وهكذا إلى أن تكون قراءتهم في التاسعة عشر بسورة تبت وفي العشرين بالإخلاص اهـ"

(رد المحتار2/ 47ط:سعيد)

فقط والله أعلم


فتوی نمبر : 144209200548

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں