بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

12 محرم 1444ھ 11 اگست 2022 ء

دارالافتاء

 

فقہی اصطلاح میں وصیت کردہ مال کا نام


سوال

جس مال کی وصیت کی جائے اسے کیا کہتے ہیں ؟

جواب

وصیت کردہ چیز کو فقہی اصطلاح میں " مُوصٰی بِہ"  کہتے ہیں، جیسے   وصیت کرنے والے کو "مُوصِی"  اور جس کے  لیے وصیت کی گئی ہے اسے "مُوصٰی لہ"  کہتے ہیں۔

الموسوعة الفقهية  میں ہے:

"الْمُوصَى بِهِ وَهُوَ مَا أَوْصَى بِهِ الْمُوصِي مِنْ مَالٍ أَوْ مَنْفَعَة." 

(الوصية، الركن الرابع:الموصى به، ج:43، ص:254، ط:امیر حمزه كتب خانه)

فقط والله اعلم 


فتوی نمبر : 144207200995

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں