بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

28 رمضان 1442ھ 11 مئی 2021 ء

دارالافتاء

 

عشاء سے پہلے تراویح پڑھ لینا


سوال

عشاء کی فرض نماز  پڑھنے سے پہلے تراویح  کی نماز  پڑھنے کا حکم کیا ہے؟

جواب

واضح رہے کہ   تراویح کی نماز عشاء کےتابع ہے، لہٰذا  عشاء کے فرض ادا کرنے سے پہلے تراویح  پڑھ  لینا درست نہیں ، بلکہ اس صورت میں عشاء کے فرضوں کے بعد تراویح کا اعادہ لازم ہوگا۔

عالمگیری میں ہے:

"«وَالصَّحِيحُ أَنَّ وَقْتَهَا مَا بَعْدَ الْعِشَاءِ إلَى طُلُوعِ الْفَجْرِ قَبْلَ الْوِتْرِ وَبَعْدَهُ حَتَّى لَوْ تَبَيَّنَ أَنَّ الْعِشَاءَ صَلَّاهَا بِلَا طَهَارَةٍ دُونَ التَّرَاوِيحِ وَالْوِتْرِ أَعَادَ التَّرَاوِيحَ مَعَ الْعِشَاءِ دُونَ الْوِتْرِ؛ لِأَنَّهَا تَبَعٌ لِلْعِشَاءِ»."

(«الفتاوى الهندية» (1/ 115)، (فَصْلٌ فِي التَّرَاوِيحِ)، (الباب التاسع في النوافل) ، الناشر: دار الفكر) 

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144209200922

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں