بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

8 جُمادى الأولى 1444ھ 03 دسمبر 2022 ء

دارالافتاء

 

ماہواری کا خون بند ہونے کے بعد روزہ رکھنے کے بعد دوبارہ دھبہ نظر آنا


سوال

حیض والی عورت پاکی کا کب تک انتظار کرسکتی ہے، رمضان کے روزے میں ؟   جیسا کہ مجھ کو حیض کا خون آنا بند ہوگیا ہے تو  میں نے فجر  کے وقت  چیک کیا ، صاف تھا تو میں نے نہا کر نماز اور  قرآن کی تلاوت بھی کی،روزہ کی نیت بھی کرلی ، جب دوبارہ سو کر اٹھ  کر چیک کیا تو  ہلکا سا  مٹیالا دھبہ آیا ، کیا میں روزہ جاری رکھوں یا چھوڑ دوں؟

جواب

حیض کی  عادت کے ایام میں مٹیالے رنگ کے دھبے بھی حیض کے شمار ہوں گے،  حیض  کی مدت میں  جو  کپڑا یا پیڈ رکھا جاتا ہے جب تک وہ بالکل سفید دکھلائی نہ دے  تب تک وہ حیض ہے، اور نماز اور روزہ ادا کرنا  جائز نہیں ہوگا ۔ اور جب پیڈ یا کپڑا  بالکل صاف نظر  آئے گا تو حیض سے پاک سجھی جائے گی۔

لہذا صورتِ  مسئولہ میں اگر ماہواری کے ایام کی عادت مکمل ہونے کے بعد خون بند ہوگیا تھا  تو اس کے لیے نماز اور روزے شروع کرنا ضروری تھا،  اس کے بعد  جب دوبارہ مٹیالے رنگ کا خون کا دھبہ حیض شروع ہونے کے بعد سے دس دن   گزرنے سے پہلے پہلے نظر آیا تھا اور پھر دس دن کے بعد یہ خون جاری نہیں رہا تو یہ حیض کا خون ہی شمار ہوگا، اور اس دن کے روزے کی قضا بھی لازم ہوگی، اور  یہ سب دن حیض ہی کے شمار ہوں گے۔

اور اگر عورت کی ماہواری عادت کے اندر ہی وہ خون کا دھبہ نظر آیا تھا،  تب  وہ حیض کا ہی تھا، اس صورت میں بھی اس دن کے روزے کی قضا لازم ہوگی۔

الدر المختار وحاشية ابن عابدين (رد المحتار) (1/ 294):

"(و إن) انقطع لدون أقله تتوضأ و تصلي في آخر الوقت، و إن (لأقله) فإن لدون عادتها لم يحل، و تغتسل و تصلي و تصوم احتياطًا."

وفیه أیضًا (1/ 288):

"(و ما تراه) من لون ككدرة وتربية (في مدته) المعتادة (سوى بياض خالص) قيل: هو شيء يشبه الخيط الأبيض. 

(قوله: ككدرة و تربية) اعلم أن ألوان الدماء ستة: هذان و السواد و الحمرة و الصفرة و الخضرة."

 فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109200487

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں