بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

18 ذو القعدة 1445ھ 27 مئی 2024 ء

دارالافتاء

 

دس تولہ سونے میں زکوٰۃ کی مقدار


سوال

10 تولہ سونےمیں کتنی زکوٰۃ ہے؟

جواب

واضح رہے کہ  زکوٰۃ اگر سونے سےاداکرنی ہو،تودس تولہ سونے کی واجب   مقدار ڈھائی فی صدہے ،جب کہ گرام کے اعتبارسے2.91گرام ہے ،اوراگر رقم  سے زکوٰۃاداکرنی ہو،توپھرزکوٰۃ اداکرتے وقت صرافہ مارکیٹ میں دس تولہ سونےکی جو قیمتِ فروخت ہواس قیمت کے ڈھائی فی صد زکوٰۃ لازم ہے۔

بدائع الصنائع میں ہے:

"فأما إذا كان له ذهب مفرد فلا شيء فيه حتى يبلغ عشرين مثقالا فإذا بلغ عشرين مثقالا ففيه نصف مثقال؛ لما روي في حديث عمرو بن حزم (والذهب ما لم يبلغ قيمته مائتي درهم فلا صدقة فيه فإذا بلغ قيمته مائتي درهم ففيه ربع العشر)."

فتاوی شامی میں ہے:

"أما إذا أدى من خلاف جنسه فالقيمة معتبرة اتفاقا.....وفي المحيط: يعتبر يوم الأداء بالإجماع وهو الأصح اهـ فهو تصحيح للقول الثاني الموافق لقولهما، وعليه فاعتبار يوم الأداء يكون متفقا عليه عنده وعندها (قوله: ويقوم في البلد الذي المال فيه) فلو بعث عبدا للتجارة في بلد آخر يقوم في البلد الذي فيه العبد بحر."

(كتاب الزكاة:باب زكاةالغنم،ج:2،ص:286،ط:سعيد)

فقط والله اعلم


فتوی نمبر : 144509100595

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں