بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

14 ذو القعدة 1445ھ 23 مئی 2024 ء

دارالافتاء

 

بچپن سےبچوں کوعربی سکھاناکیساہے؟


سوال

بچوں کو بچپن سے عربی سکھانے کا کیا حکم ہے ؟

جواب

واضح رہےکہ عربی زبان ہماری مذہبی زبان ہے،عربی زبان کی بہت اہمیت ہےاس کی اہمیت کااندازہ اس سےبھی ہوتاہےکہ شریعت نےہمارےدین کےبہت ساری بنیادی چیزوں کواسی زبان میں رکھاہے،مثلاً :قرآن ،نماز،اذان،تمام خطبےعربی زبان میں ہیں،حتیٰ کہ مسلمانوں کواپنےدرمیان کلام کی ابتداہی عربی سےکرنےکی تعلیم دی گئی ہےیعنی "السلام علیکم"کےذریعہ ،نیز عربی زبان اہل جنت کی زبان ہے، قرآن کی زبان  ہے،رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم  کی زبان ہے توگویاشریعت ان چیزوں کوعربی زبان میں رکھ کر ہمیں اس بات کی تعلیم دی ہے کہ اس زبان کےساتھ ہماراایک تعلق وابستہ رہےاورایک نہ ختم ہونےوالامربوط رشتہ اس کےساتھ قائم ہو،اس اہمیت کےپیشِ نظربچوں کواس زبان کی تعلیم دینا،تاکہ اللہ کاکلام سمجھے،دین کےتمام تعلیمات جوکہ عربی ہی میں ہیں اسےسیکھ لیں ،بہت ہی افضل عمل اورباعث اجر ہونے کے ساتھ ساتھ اولاد کی تعلیم و تربیت کا اہم ذریعہ ہے۔

المستدرک علی الصحیحین:

" أخبرنا أبو محمد الحسن بن محمد المهرجاني، ثنا عبد العزيز بن معاوية، ثنا أبو سفيان زياد بن سهل الحارثي، ثنا عمارة بن مهران المعولي، ثنا عمرو بن دينار، عن سالم بن عبد الله، عن ابن عمر، رضي الله عنهما قال: قال رسول الله صلى الله عليه وسلم: «‌لما ‌خلق ‌الله ‌الخلق ‌اختار ‌العرب ثم اختار من العرب قريشا ثم اختار من قريش بني هاشم ثم اختارني من بني هاشم فأنا خيرة من خيرة."

(كتاب معرفة الصحابة،باب فضل كافة العرب،رقم الحديث:6996،ج:4،ص:97،ط:دارالكتب العلمية)

وفیہ ایضاً:

" حدثني علي بن حمشاذ العدل، أنبأ أبو مسلم إبراهيم بن عبد الله، أن معقل بن مالك، حدثهم قال: ثنا الهيثم بن حماد، عن ثابت، عن أنس، رضي الله عنه قال: قال رسول الله صلى الله عليه وسلم: «حب العرب إيمان وبغضهم نفاق» هذا حديث صحيح الإسناد ولم يخرجاه."

وفیہ ایضاً:

" ما حدثني أبو عمرو سعيد بن القاسم بن العلاء المطوعي، ثنا أحمد بن الليث بن الخليل، ثنا إسحاق بن إبراهيم الجريري، ببلخ، ثنا عمرو بن هارون، ثنا أسامة بن زيد الليثي، عن نافع، عن ابن عمر، رضي الله عنهما قال: قال رسول الله صلى الله عليه وسلم: «من أحسن منكم أن يتكلم بالعربية فلا يتكلمن بالفارسية فإنه يورث النفاق."

فقط والله اعلم


فتوی نمبر : 144509102155

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں