بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

18 ربیع الاول 1443ھ 25 اکتوبر 2021 ء

دارالافتاء

 

اولاد کی پیدائش سے پہلے سمیع نام رکھنے کی نیت کرنا


سوال

اولاد کی امید لگنے سے پہلے یہ نیت کی تھی کہ اگر بیٹا ہواتواللہ پاک کا نام "سمیع"  اپنے بیٹے کا نام رکھوں گا۔ اب اللہ پاک نے بیٹا عطا کیا،  کیا اب  "سمیع"  نام ہی رکھنا  چاہیے یا  کوئی اور  بھی نام رکھ سکتے ہیں ؟

جواب

صورتِ  مسئولہ  میں  بچے کے لیے کوئی دوسرا نام تجویز  کرسکتے ہیں،نیز "سمیع" اللہ تعالیٰ کے ان صفاتی ناموں میں سے ہے جن کا استعمال بندوں کے لیے بھی جائز ہے، لہٰذا "سمیع" نام رکھنا بھی جائز ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144206200214

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں