بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

9 صفر 1443ھ 17 ستمبر 2021 ء

دارالافتاء

 

اریان، ریان نام رکھنا


سوال

 میں نے اپنے بیٹے کا نام "محمد اریان"  رکھا ہے،  کیا نام صحیح ہے؟  اس کا معنی کیا ہے؟

جواب

’’اریان‘‘ یہ عربی زبان کا لفظ نہیں ہے، یہ کسی یونانی مؤرخ کا نام رہا ہے،  اس کے بجائے آپ اپنے بیٹے کا ”ریّان“ (Rayyan   ) نام  رکھ سکتے ہیں۔

"ریان" را کے زبر ،یا کی تشدید اور زبر کے ساتھ ہے، اس کا معنی "سیراب کرنے والا "ہے، "ریان" جنت کا ایک خاص دروازہ ہے جس سے صرف روزہ دار داخل ہوں گے۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144108201071

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں