بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

4 شوال 1445ھ 13 اپریل 2024 ء

دارالافتاء

 

آریان نام رکھنا


سوال

آریان نام کیسا ہے؟ رکھنا چاہیے یا نہیں؟

جواب

لفظ "آریان کا اردو ، عربی اور فارسی لغت میں کوئی معروف معنی نہیں ہے، اس لفظ کے قریب قریب لفظ  "آریہ" اردو لغت میں استعمال ہوتا ہے جس کے ایک معنی بزرگ  اور معزز کے ہیں اور دوسرا معنی ایک قدیم قوم کا نام ہے، اسی طرح فارسی لغت میں "آرین" استعمال ہوتا ہے جس کا معنی آریہ قوم کی طرف نسبت کے ہیں،لہذا "آریان" نام نہ رکھا جائے  بلکہ اس کے بجائے کسی صحابی کے نام کا انتخاب کر لیا جائے۔

فیروز اللغات (فارسی اردو) میں ہے:

"آرین: آریائی نسل۔"

(ص نمبر ۹،فیروز سنز)

فرہنگ آصفیہ میں ہے:

"آریا: ۱) ایرین : وہ قوم جسکی بولی سنکسرت تھی۔ ۲) ایرین زبان۔"

(ج نمبر ۱، ص نمبر ۱۴۹،مکبتہ حسن سہیل لمیٹڈ)

فیروز اللغات میں ہے:

"آریہ: بزرگ ، معزز،قدیم قول جس کی نسل کے لوگ پاکستان ،ہندوستان،ایران اور یورپ میں آباد ہیں۔"

(ص نمبر ۱۷،فیروز سنز)

فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144307102276

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں