بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

20 ذو الحجة 1442ھ 31 جولائی 2021 ء

دارالافتاء

 

مصنوعی دھات کی انگوٹھی پہن کر نماز پڑھنے کا حکم


سوال

آرٹیفشل انگوٹھی پہن کر نماز ادا کی جاسکتی ہے؟

جواب

عورت کے لیے سونے چاندی کے علاوہ کی انگوٹھی پہننا اور مرد کے لیے چاندی (بشرطیکہ ساڑھے چار ماشہ سے کم کم ہو) کے علاوہ انگوٹھی پہننا ناجائز ہے، البتہ اگر کسی نے اس کو پہن کر نماز پڑھ لی تو نماز ادا  ہوجائے گی، دہرانے کی ضرورت نہیں، آئندہ نہ پہنے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144201200493

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں