بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

19 شعبان 1445ھ 01 مارچ 2024 ء

دارالافتاء

 

آئزہ نام رکھنا


سوال

آئزہ نام کا مطلب کیا ہے، اور یہ نام رکھنا کیسا ہے ؟

جواب

واضح رہے کہ  نام کا درست تلفظ عائذہ ہے ،آئزہ اور عائزہ غلط ہے۔

 ”عائزہ“ (زا کے ساتھ) کا معنی ہے: مفلس؛ اس لیے زاء کے ساتھ  یہ نام رکھنا اچھا نہیں۔

جب کہ ’’عائذہ‘‘  (ذال کے ساتھ) نام  کا معنی ہے: پناہ میں آنے والی، پناہ لینے والی، یہ مفہوم اچھا ہے، لہٰذا یہ (عائذہ) نام رکھنا درست ہے۔ 

لسان العر ب میں ہے:

"العوز: أن يعوزك الشيء وأنت إليه محتاج."

(ترجمہ:آپ کو ایک چیز کی ضرورت ہے جب کہ وہ چیز آپ کے پاس نہ ہو)

(ج،5 ،ص: 385 ،ط:دار صادر - بيروت)

وفیہ ایضا:

"عوذ: عاذ به يعوذ عوذا وعياذا ومعاذا: لاذ به ولجأ إليه واعتصم."

(ج:3 ،ص:498 ،ط:دار صادر -بیروت)

فقط واللہ اعلم

فقط واللہ اعلم 


فتوی نمبر : 144408101113

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں