بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

3 ربیع الاول 1442ھ- 21 اکتوبر 2020 ء

دارالافتاء

 

ایک رکعت کے بعد سلام پھیرنے کی صورت میں قرأت کے اعادہ کا حکم


سوال

اگر تراویح میں ایک رکعت میں سلام پھیر دیا گیا  ہو تو قرأت واپس لوٹانی پڑے گی جو پہلے رکعت میں پڑھی گئی تھی ؟

جواب

تراویح میں ایک رکعت پر سلام پھیرنے سے چوں کہ نماز باطل ہوجاتی ہے؛ اس لیے اس رکعت میں کی گئی قرأت بھی کالعدم ہوجائے گی اور  تراویح  میں تکمیل قرآن کے لیے اس رکعت میں کی گئی قرأت کا اعادہ کرنا لازمی ہوگا۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144109201707

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں