بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

8 شوال 1441ھ- 31 مئی 2020 ء

دارالافتاء

 

قربانی کا جانور مرجائے توحصہ ڈالنا جائز ہے


سوال

قربانی کے لیے لایا گیا بکر امرگیا تو اب گائے میں حصہ ڈال کر قربانی کرسکتے ہیں ؟

جواب

اگر صاحبِ نصاب آدمی نے قربانی کے لیے جانور خریدا تھا اور جانور قربانی سے قبل ہی مرگیا تو اس صورت میں اس شخص پر دوسری قربانی کرنا واجب ہے، اور ایسا شخص بڑے جانور کے حصہ میں شریک ہوسکتا ہے۔

البتہ اگرجانور خرید نے والا شخص غریب تھا اورجانور قربانی سے پہلے مرگیا یا گم ہوگیا تو اس پر دوسری قربانی واجب نہیں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144012200297

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے