بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

12 ربیع الاول 1442ھ- 30 اکتوبر 2020 ء

دارالافتاء

 

فجر اورمغرب کی  نماز کے بعد سورۂ حشر پڑھنا


سوال

 کیا فجر  اورمغرب کی  نماز کے بعد سورۂ حشر  پڑھنا ثابت ہے یا نہیں؟

جواب

حدیث شریف میں آتا ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ  جو شخص صبح کے وقت تین مرتبہ ’’أعوذ بالله السميع العليم من الشيطان الرجيم‘‘ پڑھے  اور  سورۃ  الحشر کی آخری تین آیات  پڑھے   تو اس کے ساتھ ﷲ تعالی ستر  ہزار فرشتے مقرر کر دیتے ہیں جو  شام تک اُس کے لیے دعا و استغفار کرتے ہیں، اگر اس دن مر جائے تو شہید مرے گا اور  جو شام کو پڑھے اس کو بھی یہی مرتبہ حاصل ہوگا ۔

سنن الترمذي (5/ 182):
"عن معقل بن يسار: عن النبي صلى الله عليه و سلم قال: من قال حين يصبح ثلاث مرات: أعوذ بالله السميع العليم من الشيطان الرجيم، وقرأ ثلاث آيات من آخر سورة الحشر وكل الله به سبعين ألف ملك يصلون عليه حتى يمسي، وإن مات في ذلك اليوم مات شهيدًا، ومن قالها حين يمسي كان بتلك المنزلة". 
فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144105200426

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں