بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 12 نومبر 2019 ء

دارالافتاء

 

عشان نام کا معنی


سوال

’’محمد آشان‘‘  نام سے متعلق آپ کا جواب پڑھا، ’’محمد عشان‘‘  سے متعلق بھی بتادیجیے۔

جواب

عربی زبان میں ’’عشن‘‘  کا معنی "اپنی طرف سے کوئی بات کرنا" ہے،"عشّان" (شین کی تشدید کے ساتھ) کا معنی ایک کھجور کا درخت ہے، "عُشانه"(عین کے پیش کے ساتھ) کا معنی بچی ہوئی کھجوریں ہیں، "عِشان" (عین کے زیر کے ساتھ) کا وزن عربی کتب میں تلاش کے باوجود نہیں مل سکا۔ یہ نام نہ رکھنا مناسب ہے۔

اس کی بجائے ’’محمد احسان‘‘  نام رکھ لیجیے۔ 

تهذيب اللغة (1/ 134، بترقيم الشاملة آليا):
"عشن: أبو عبيد عن الفراء: عَشَن برأيه واعتشَنَ، إذا قال برأيه".

تكملة المعاجم العربية (7/ 217):
"عشن: عَشَّان: النخل البري".

لسان العرب (13/ 285):
"( عشن ) عَشَنَ واعْتَشَنَ قال برأْيه وفي التهذيب أَعْشَنَ واعْتَشَنَ عن الفراء وقال ابن الأَعرابي العاشِنُ المُخمِّنُ والعُشانة الكَرَبَةُ عُمانية وحكاها كراع بالغين معجمة ونسبها إلى اليمن والعُشانةُ ما يبقى في أُصول السعف من التمر وتعَشَّنَ النخلةَ أَخذَ عُشانتَها يقال تعَشَّنْتُ النخلة واعْتَشَنْتُها إذا تتبَّعْتَ كُرابتَها فأَخذته والعُشانة اللُّقاطة من التمر قال أَبو زيد يقال لما بقي في الكِباسَة من الرُّطَبِ إذا لُقِطت النخلة العُشانُ والعُشانةُ والغُشانُ والبُذَارُ مثله والعُشانة أَصلُ السَّعَفة وبها كُنِّيَ أَبو عُشانة".
 فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144103200156

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے