بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

25 جمادى الاخرى 1443ھ 29 جنوری 2022 ء

دارالافتاء

 

شیزان نام رکھنے کا حکم


سوال

'' شیزان'' نام رکھنا کیسا ہے؟

جواب

عربی زبان میں ''شیزان'' ، شزن سے ہے، شزن کے معنی مختلف ہیں : زمین کا سخت حصہ، کنارہ، طرف،  ''رجل شزن''، بداخلاق آدمی کو کہا جاتا ہے،  اسی طرح سختی وغیرہ اس کے معانی آتے ہیں،  یہ نام رکھنا اچھا نہیں ہے۔

 بہتر ہے کہ  انبیاء کرام علیہم الصلاۃ والسلام  یا صحابہ کرام رضوان اللہ علیھم اجمعین کے ناموں میں سے کوئی نام، یا  صلحاء (نیک لوگوں) کا جن ناموں کے رکھنے کا تعامل ہو  وہ نام رکھا جائے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143908200643

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں