بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 شوال 1441ھ- 02 جون 2020 ء

دارالافتاء

 

رکوع سجدہ پر قدرت نہ رکھنے والا شخص نماز کیسے ادا کرے؟


سوال

نماز کی حالت میں رکوع اور سجدہ  پر قدرت نہ ہو تو نماز کیسے پڑھی جائے گی؟ قیام اور رکوع کھڑے ہوکر کرسکتے ہیں یا بیٹھ کر کریں؟

جواب

سجدہ پرقدرت نہ ہونے کی صورت میں قیام کی فرضیت ساقط ہوجاتی ہے۔لہذا  اگر کوئی سجدہ پرقادرنہیں، نیزسجدہ سے قیام کی طرف اٹھنابھی دشوارہے توایسی صورت میں بیٹھ کراشارے سے رکوع سجدہ کرتے ہوئے نمازاداکرے,کھڑے ہوکر بھی اشارہ سے رکوع وسجود کرسکتے ہیں، لیکن افضل یہ ہے بیٹھ کر  اشارہ سے رکوع سجدہ کیا جائے؛اس لیے  کہ قیام کی فرضیت سجدہ کے وسیلہ کے طور پر ہے، جب سجدہ پر قدرت نہیں تو قیام کی فرضیت ساقط ہے ۔فتاوی ہندیہ میں ہے: "وکذا لوعجز عن الرکوع والسجود وقدر علی القیام فالمستحب  ان یصلی قاعدا بایماء وان صلی قائما بایماءجاز عندنا"( ج: ۱، ص: ۱۳۶) فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143803200004

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے