بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

15 ربیع الثانی 1442ھ- 01 دسمبر 2020 ء

دارالافتاء

 

رمضان میں قضا نمازوں کی ادائیگی کا ثواب


سوال

 اگررمضان المبارک کے مہینے میں  قضانمازوں کوپڑھا جاۓتوان کاثواب رمضان کےدرجات کےبرابرملےگا یا عام مہینوں کے برابر ؟

جواب

 رمضان میں ادا کی جانے والی قضا نماز کے  ثواب اور درجات کے بڑھ جانے کی اللہ کی ذات سے  امید کی جاسکتی ہے، لیکن ایک قضا نماز ایک ہی کی طرف سے کافی ہوگی، یعنی ایسا نہیں کہ ایک قضا نماز ستر نمازوں کی طرف سے کافی ہوجائے۔ باقی رمضان میں ادائیگی کی امید پر قضا نمازوں کی ادائیگی میں تاخیر کرنا درست نہیں ہے، اول تو نماز قضا ہی نہ کی جائے؛ کیوں کہ اپنی سستی وکوتاہی سے نماز قضا کرنا گناہ ہے، اور اگر قضا ہوجائے تو فوراً  اس کی ادائیگی کا انتظام ہو اور ساتھ میں توبہ واستغفار بھی کیا جائے۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144008201099

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں