بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

12 شوال 1441ھ- 04 جون 2020 ء

دارالافتاء

 

حاملہ یہ سمجھ کر کہ بچہ پیدا ہونے والا روزہ توڑدے تو کیا حکم ہے؟


سوال

 اگر کسی حاملہ عورت نے رمضان کے مہینہ میں صبح کے وقت خون دیکھا تو اس نے سوچاکہ بچہ پیدا ہونےوالا ہے تو اس نے روزہ کھا لیا، بچہ 3یا4دن بعد آپریشن سے پیدا ہوا، کیا اس عورت پر جو ماقبل روزہ کھالیا ہے اس پر کفارہ ہے یا قضا ہے؟

جواب

صورتِ مسئولہ میں صرف ایک روزہ کی قضا لازم ہوگی، کفارہ لازم نہیں ہوگا۔

الفتاوى الهندية (1/ 207)

"(ومنها: حبل المرأة، وإرضاعها) الحامل والمرضع إذا خافتا على أنفسهما أو ولدهما أفطرتا وقضتا، ولا كفارة عليهما، كذا في الخلاصة".فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909202296

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں